>
  • You have 1 new Private Message Attention Guest, if you are not a member of Urdu Tehzeb, you have 1 new private message waiting, to view it you must fill out this form.
    .
    + Reply to Thread
    + Post New Thread
    Results 1 to 4 of 4

    Thread: کیسی بے چہرہ رُتیں آئیں وطن میں اب کے

    1. #1
      Administrator Admin intelligent086's Avatar
      Join Date
      May 2014
      Location
      لاہور،پاکستان
      Posts
      38,411
      Threads
      12102
      Thanks
      8,637
      Thanked 6,945 Times in 6,472 Posts
      Mentioned
      4324 Post(s)
      Tagged
      3289 Thread(s)
      Rep Power
      10

      کیسی بے چہرہ رُتیں آئیں وطن میں اب کے




      کیسی بے چہرہ رُتیں آئیں وطن میں اب کے

      پھُول آنگن میں کھِلے ہیں نہ چمن میں اب کے

      برف کے ہاتھ ہی ، ہاتھ آئیں گے ، اے موجِ ہوا
      حِدتیں مجھ میں ، نہ خوشبو کے بدن میں ، اب کے

      دھُوپ کے ہاتھ میں جس طرح کھُلے خنجر ہوں
      کھُردرے لہجے کی نوکیں ہیں کرن میں اب کے

      دل اُسے چاہے جسے عقل نہیں چاہتی ہے
      خانہ جنگی ہے عجب ذہن و بدن میں اب کے

      جی یہ چاہے، کوئی پھر توڑ کے رکھ دے مجھ کو
      لذتیں ایسی کہاں ہوں گی تھکن میں اب کے

      ***





      Similar Threads:

    2. #2
      ....You don't need to follow trends to be stylish..... Admin Admin's Avatar
      Join Date
      Apr 2014
      Location
      Dubai , Al Mamzar
      Posts
      8,008
      Threads
      254
      Thanks
      372
      Thanked 294 Times in 242 Posts
      Mentioned
      681 Post(s)
      Tagged
      6427 Thread(s)
      Rep Power
      10

      Re: کیسی بے چہرہ رُتیں آئیں وطن میں اب کے

      Thanks for sharing Keep it up ..


    3. #3
      Star Member www.urdutehzeb.com/public_html Dr Danish's Avatar
      Join Date
      Aug 2015
      Posts
      3,237
      Threads
      0
      Thanks
      211
      Thanked 657 Times in 407 Posts
      Mentioned
      28 Post(s)
      Tagged
      1020 Thread(s)
      Rep Power
      505

      Re: کیسی بے چہرہ رُتیں آئیں وطن میں اب کے

      Quote Originally Posted by intelligent086 View Post



      کیسی بے چہرہ رُتیں آئیں وطن میں اب کے

      پھُول آنگن میں کھِلے ہیں نہ چمن میں اب کے


      برف کے ہاتھ ہی ، ہاتھ آئیں گے ، اے موجِ ہوا
      حِدتیں مجھ میں ، نہ خوشبو کے بدن میں ، اب کے


      دھُوپ کے ہاتھ میں جس طرح کھُلے خنجر ہوں
      کھُردرے لہجے کی نوکیں ہیں کرن میں اب کے


      دل اُسے چاہے جسے عقل نہیں چاہتی ہے
      خانہ جنگی ہے عجب ذہن و بدن میں اب کے


      جی یہ چاہے، کوئی پھر توڑ کے رکھ دے مجھ کو
      لذتیں ایسی کہاں ہوں گی تھکن میں اب کے


      ***




      Nice Sharing .....
      Thanks


    4. #4
      Administrator Admin intelligent086's Avatar
      Join Date
      May 2014
      Location
      لاہور،پاکستان
      Posts
      38,411
      Threads
      12102
      Thanks
      8,637
      Thanked 6,945 Times in 6,472 Posts
      Mentioned
      4324 Post(s)
      Tagged
      3289 Thread(s)
      Rep Power
      10

      Re: کیسی بے چہرہ رُتیں آئیں وطن میں اب کے

      Quote Originally Posted by Admin View Post
      Thanks for sharing Keep it up ..
      Quote Originally Posted by Dr Danish View Post
      Nice Sharing .....
      Thanks





    + Reply to Thread
    + Post New Thread

    Thread Information

    Users Browsing this Thread

    There are currently 1 users browsing this thread. (0 members and 1 guests)

    Visitors found this page by searching for:

    Nobody landed on this page from a search engine, yet!
    SEO Blog

    User Tag List

    Posting Permissions

    • You may not post new threads
    • You may not post replies
    • You may not post attachments
    • You may not edit your posts
    •