PDA

View Full Version : سلیم کوثر



  1. آوارہءِ شب روٹھ گئے تیری گلی سے
  2. رات کی جلتی تنہائی میں
  3. لاکھ مسمار کیے جائیں زمانے والے
  4. میں خیال ہوں کسی اور کا مجھے سوچتا کوئی اور &#
  5. وہ تو یہ کہیے گھڑی تجھ سے جدا ہونے کی تھی
  6. کس گھاٹ اُترنا تھا لبِ جُو نکل آئے
  7. زخمِ احساس اگر ہم بھی دکھانے لگ جائیں
  8. بجھنے لگ جائیں تو پھر شمعیں جلا دی جائیں
  9. کبھی چھپایا نہیں جو گناہ مجھ سے ہوا
  10. اب یہ موسم مری پہچان طلب کرتے ہیں
  11. جب محبتیں کی ہیں، پھر کوئی گواہی کیا
  12. تم کیا جانو عشق میں گزرے لمحے کیا بیکار گئے
  13. جلتی ہوئی سڑکوں پر رقصاں دھول بھرا سنّاٹا 
  14. میں صدائے عشقِ رسولؐ ہوں، مرا رابطہ تو بحا
  15. میں نے اسمِ محمدؐ کو لکھا بہت اور چُوما بہت
  16. میری آنکھوں میں اُنؐ کے خواب رہیں
  17. اس سے پہلے کہ یہ دنیا مجھے رسوا کر دے۔۔۔ دعا
  18. گھر بسا لوں گا تو تنہائی چلی جائے گی
  19. تجھ کو ڈھونڈے ہے گزرتا ہوا پَل پَل جاناں
  20. آئینے میں اک صورت ہے اور وہ بھی ادھوری ہے
  21. تہوں میں کیا ہے، دریا کی روانی بول پڑتی ہے
  22. دیپ بن جائیں گے جو پاؤں کے چھالے ہوں گے
  23. اگرچہ رنج بہت ہے، پہ لب ہلیں گے نہیں
  24. اب کیا کہیں کہ تم سے محبّت ہی اور ہے
  25. پیاس بھی ہم ہیں، پیاس بجھانے والے بھی ہم
  26. حُسن کو عشق کی تصویر بتاتے ہوئے لوگ
  27. تیرے چہرے سے عیاں ہے کوئی تیرے جیسا
  28. ہم دل میں تری چاہ زیادہ نہیں رکھتے
  29. ہوا کہیں کی بھی ہو اور شجر کہیں کا بھی ہو
  30. دل تجھے ناز ہے جس شخص کی دل داری پر
  31. بدل گیا ہے سبھی کچھ اُس ایک ساعت میں
  32. کیسے ہنگامۂ فرصت میں ملے ہیں تجھ سے
  33. ہمیں اچھا تو لگتا ہے تمہارا اِس طرح ملنا
  34. بہت دنوں میں کہیں ہجرِ ماہ و سال کے بعد
  35. یہ جھوٹ ہے، دلداری کے موسم نہیں آئے
  36. Saleem Kausar
urdutehzeb.com